Official Web

سابق وزیراعظم نواز شریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نوازانتقال کرگئیں

لندن: سابق وزیراعظم نوازشریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز لندن کے ہارلے اسٹریٹ کلینک میں دوران علاج انتقال کرگئیں۔

کینسر کے مرض میں مبتلا بیگم کلثوم نواز کو گزشتہ رات طبعیت بگڑنے پر دوبارہ وینٹی لیٹر پر منتقل کیا گیا تھا۔

نواز شریف کے چھوٹے بھائی شہباز شریف اور اور ان کے صاحبزادے حسین نواز نے  بیگم کلثوم نواز کی وفات کی تصدیق کی۔

President PMLN@president_pmln

میری بھابھی اور میاں نواز شریف صاحب کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز اب ہم میں نہیں رہیں، اللہ تعالٰی انکی مغفرت فرمائے۔
ﺇﻧَّﺎﻟِﻠّٰﻪ ﻭﺇﻧَّﺎﺇﻟَﻴْﻪِ ﺭَﺍﺟِﻌُﻮْﻥ

خاندانی ذرائع کے مطابق بیگم کلثوم نواز کی تدفین پاکستان میں ہی ہوگی اور جیسے ہی لندن میں مجسٹریٹ سے کلیئرنس سرٹیفکیٹ ملے گا، میت کو وطن لانے کے انتظامات کیے جائیں گے۔

جیل میں نوازشریف کو اہلیہ کے انتقال سے آگاہ کردیا گیا، ذرائع

دوسری جانب ذرائع کاکہنا ہےکہ میاں نوازشریف کو ان کی اہلیہ کے انتقال سے اڈیالہ جیل میں آگاہ کردیا گیا ہے جس کے بعد نوازشریف، مریم نواز اور کیپٹن (ر) صفدر کو ایک ہی روم میں منتقل کردیا گیا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ بیگم کلثوم نواز کے انتقال کی خبر پر نوازشریف، مریم نواز اور کیپٹن (ر) صفدر آبدیدہ ہوگئے۔

واضح رہے کہ بیگم کلثوم نواز کو اگست 2017 کے دوران گلے میں کینسر کی تشخیص ہوئی تھی جس کے علاج کی غرض سے وہ لندن میں موجود تھیں، جہاں ان کی کئی کیمو تھراپیز ہو چکی تھیں۔

بیگم کلثوم نواز 1950 میں ڈاکٹر محمد حفیظ کے گھر پیدا ہوئیں، وہ  رستم زمان گاما پہلوان کی نواسی تھیں۔

اپریل 1971 میں ان کی سابق وزیراعظم نواز شریف سے شادی ہوئی۔

بیگم کلثوم نواز کو 3 مرتبہ خاتون اول رہنے کا اعزاز حاصل ہے۔ وہ رکن قومی اسمبلی بھی رہیں۔

وزیراعظم عمران خان کی تعزیت

وزیراعظم عمران خان نے بیگم کلثوم نواز کی وفات پر تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے پاکستانی ہائی کمیشن کو غمزدہ خاندان کو ہر ممکن معاونت کی ہدایت کی ہے۔

Comments
Loading...