’(ن) لیگ کی عدلیہ مخالف سرگرمیوں کیخلاف اسلام آباد میں لوگوں کو اکٹھا کروں گا‘

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کی عدالت مخالف سرگرمیوں کے خلاف اسلام آباد میں لوگوں کو اکٹھا کروں گا۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ پاکستان میں آئین اور جمہوریت پر حملے ہورہے ہیں اور عوام کی عدالت کے نام پر لوگوں کو دھوکا دیا جارہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کی عدالت مخالف سرگرمیوں کے خلاف اسلام آباد میں لوگوں کو اکٹھا کروں گا اور ثابت کروں گا کہ قوم پاکستان کی عدلیہ کے ساتھ کھڑی ہے، اسلام آباد میں یہ بتانے کے لیے بھی شو کروں گا کہ نواز شریف کو کیوں نکالا۔

چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ ایم کیو ایم کے بانی الطاف حسین پر پابندی لگ چکی ہے اور نواز شریف اس کے قریب پہنچ چکے ہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ حدیبیہ کیس میں نئے شواہد کے ساتھ عدالت جائیں گے اور جب بھی یہ کیس سنا جائے گا تو شہباز شریف کا بھی مجھے کیوں نکالا جیسا حال ہوگا۔

ایک سوال کے جواب میں چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ قطری خط کے جھوٹ پر نواز شریف کو جیل بھیجنا چاہیے تھا کیوں کہ کیس اسی وقت ختم ہوگیا تھا جب کہ ٹرسٹ ڈیڈ بھی فراڈ تھی جو کہ جعلسازی تھی اور اس کی بھی سزا ہے۔

Comments
Loading...