پاکستان جانے والے دریاؤں کے پانی کا رخ موڑ دیں گے، بھارت کی دھمکی

کمشیر کے ضلع پلوامہ میں ہونے والے حملے کو جواز بناکر بھارت نے پاکستان کیخلاف آبی دہشت گردی شروع کردی۔

بھارت نے پاکستان آنے والے تین دریاؤں کا پانی روکنے اور دریائے راوی پر ڈیم بنانے کی دھمکی دی ہے۔

اس حوالے سے بھارتی وزیر برائے روڈ ٹرانسپورٹ اینڈ ہائی ویز اور وزیر برائے آبی وسائل اینڈ ریور ڈویلپمنٹ نتین گڈکری نے دھمکی دی ہے کہ ہماری حکومت نے پاکستان جانے والا دریاؤں کا پانی روکنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔

نتین گڈکری کا کہنا ہے کہ ہم مشرقی دریاؤں کا پانی روک کر جموں و کشمیر اور پنجاب میں پانی دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ دریائے راوی، ستلج اور بیاس کا پانی جو پاکستان جاتا ہے اس کا رخ موڑ کر جموں و کشمیر اور پنجاب پہنچایا جائے گا۔

بھارت پاکستان کا پانی بند نہیں کرسکتا، ڈپٹی انڈس واٹر کمشنر

اس حوالے سے پاکستان کے ڈپٹی انڈس واٹر کمشنر شیراز میمن کا کہنا ہے کہ بھارت پاکستان کا پانی بند نہیں کر سکتا۔

انہوں نے کہا کہ بھارت کے پاس ہمارے دریاؤں میں آنے والے پانی روکنے اور رخ موڑنے کی صلاحیت ہی نہیں، یہ سراسر بھارت کی گیدڑ بھبکی ہے۔

شیراز میمن نے کہا کہ بھارت میں سیاسی لوگ سیاسی باتیں کرتے ہیں،عملاً ایسا ممکن نہیں، مودی نے وزیراعظم بنتے ہی اس حوالے سے بریفنگ لی تھی، بھارت کو پتا لگ گیا تھا کہ ایسا ممکن نہیں ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ مودی نے اس کے بعد سے ایسا بیان نہیں دیا۔

پاکستان انڈس واٹر کمشنر کا بھی کہنا ہے کہ بھارت کی طرف سے پاکستانی دریاؤں کا پانی روکنے کی کوئی اطلاع نہیں۔

Comments
Loading...