چوہدری برادران ابھی تک حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں، حکومتی ٹیم کا دعویٰ

لاہور: حکومتی ٹیم نے دعویٰ کیا ہے کہ چوہدری برادران ابھی تک حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں۔

تحریک انصاف کا اعلیٰ سطحی وفد چوہدری برادران کی رہائش گاہ آئے، جہاں انہوں نے ا سپیکر پنجاب اسمبلی اور مسلم لیگ (ق) کے صدر چوہدری پرویزالٰہی سے ملاقات کی، حکومتی وفد میں وفاقی وزراء اسد عمر، شاہ محمود قریشی اور پرویز خٹک شامل تھے، جب کہ ق لیگ کے رہنما اور ارکان قومی اسمبلی چوہدری طارق بشیر چیمہ، مونس الہیٰ، سالک حسین، حسین الٰہی اور سینیٹر کامل علی آغا بھی شریک تھے۔

ملاقات میں تحریک عدم اعتماد، موجودہ ملکی سیاسی صورتحال سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر تفصیلی بات چیت کی گئی، جب کہ وفاقی وزرا نے  وزیراعظم کا اہم پیغام چوہدری شجاعت کو پہنچایا۔

ق لیگ کے رہنماؤں کا بیان

مسلم لیگ (ق) کے رہنما مونس الہیٰ کا کہنا تھا کہ ہمارے حکومت کے ساتھ اچھے تعلقات ہیں جلد ہی بریک تھرو دیں گے۔ چوہدری پرویز الہیٰ کا کہنا تھا کہ  ہم اپنی بہتری کا فیصلہ کریں گے دونوں جانب سے آفرز موجود ہیں، تمام اتحادیوں کے ساتھ مشترکہ فیصلہ کریں گے۔

حکومتی وزرا کا بیان

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ چوہدری برادران ابھی تک حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں۔ وفاقی وزیر اسد عمر کا کہنا تھا کہ گلے شکوے اپنوں سے ہوتے ہیں جہاں کوئی امید ہوتی ہے وہاں ہی گلہ ہوتا ہے، گلہ شکوہ اس سے کیا جاتا ہے جس سے امید اور رشتہ ہوتا ہے، رشتہ آج بھی قائم ہے، ہماری بہت اچھی اور مثبت بات چیت ہوئی ہے۔

دوسری جانب ذرائع کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ ق دیگر حکومتی اتحادیوں سے بھی ملاقات کرے گی، ایم کیو ایم اور بلوچستان عوامی پارٹی سے آج ملاقات متوقع ہے، جو تھوڑی دیر بعد پارلیمنٹ لاجز میں ہوگی۔

Comments
Loading...