اب فیملی کو ٹائم دیں گے، رمضان ہے عبادت بھی کریں گے: بابر اعظم

آسٹریلیا کا دورہ پاکستان کے اختتام پر قومی ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے اپنے پیغام میں کہا کہ اب چونکہ سیریز ختم ہو چکی ہے تو ہم فیملی کو ٹائم دیں گے، روزے چل رہے ہیں، عبادت بھی کریں گے اور  پھر کھیل کی طرف آئیں گے۔

لاہور میں آن لائن پریس کانفرنس کرتے ہوئے قومی ٹیم کے کپتان نے کہا کہ میں  آسٹریلیا اور کھلاڑیوں کا شکریہ ادا کرتا ہوں کہ وہ پاکستان آئے،  جب بھی ان سے بات ہوئی تو انہوں نے یہی کہا کہ وہ یہاں  کرکٹ انجوائے کر رہے ہیں۔

بابر اعظم کا کہنا تھا کہ اونچ نیچ ہو جاتی ہے، مڈل آرڈر میں اچھے کھلاڑی ہیں ہم انہیں مواقع دیں گے، ابھی ورلڈ کپ میں وقت ہے اور ہم کمبی نیشن بنا نے میں کامیاب ہوں گے۔

کپتان کا کہنا تھا کہ میں فیصلے خود کرتا ہوں اور کو شش کرتا ہوں کہ بہترین الیون میدان میں اتاروں، میں مشورے سب سے کرتا ہوں اور جو ٹیم کے لیے اچھا ہوتا ہے وہ کرنے کی کوشش کرتا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ آسٹریلیا کے خلاف کھیلے جانے والے واحد ٹی ٹوئنٹی میں ہمارے رنز تھوڑے کم تھے، ہمیں مومنٹم برقرار رکھنا چاہیے تھا، ہمیں فیلڈنگ کو بہتر کرنا ہے اور آج بھی جو مواقع ملے ان سے فائدہ اٹھانا چاہیے تھا۔

‘حسن علی پر برا وقت چل رہا ہے’

فاسٹ بولر حسن علی کے حوالے سے ٹیم کے کپتان نے کہا کہ ان پر برا وقت چل رہا ہے، ہم اسے کم بیک کروانے کی کوشش کر رہے ہیں اور کرتے رہیں گے، حسن نے ہمیں بہت میچز جتوائے ہیں۔

بابر اعظم نے مزید کہا کہ ہم پر کوئی پریشر نہیں تھا، ہم آئندہ سیزن میں مزید اچھا کرنے کی کوشش کریں گے، ہم جس طرح کا ٹوٹل چاہ رہے تھے ویسا ٹوٹل ہمیں نہیں مل سکا، میں مزید لمبا کھیلنا چاہتا ہوں جبکہ عثمان قادر کو موقع ملا اور اس نے فائدہ اٹھایا، وہ مزید بہتر ہو گا۔

Comments
Loading...