شاہ محمود نے امریکی عہدیدار کی گفتگو پر فوری احتجاج سے منع کیا: وزیر مملکت برائے خارجہ

وزیر مملکت برائے خارجہ امور حنا ربانی کھر کا کہنا ہے کہ امریکی عہدیدار کی گفتگو پر امریکا سے فوری احتجاج کرنے سے منع اور کسی نے نہیں بلکہ سابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کیا تھا۔

حنا ربانی کھر کا کہنا تھا کہ امریکی عہدیدار کی گفتگو کی اطلاع شاہ محمود قریشی کو فوری دے دی گئی تھی مگر شاہ محمود نے امریکا کو فوری احتجاجی مراسلہ دینے سے منع کر دیا تھا۔

حنا ربانی کھر نے کہا کہ پاکستانی سفیر اسد مجید کے مراسلے کی آخری تین لائنوں میں سفیر کا اپنا تجزیہ اور تجویز تھی کہ امریکا کو ڈی مارش دیا جائے اور پوچھا جائے کہ یہ کسی کی ذاتی پوزیشن ہے یا حکومت کی رائے ہے؟

یاد رہے کہ گزشتہ روز وزیراعظم شہباز شریف کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا تھا جس میں تینوں مسلح افواج کے سربراہان اور وفاقی وزراء بھی موجود تھے۔

امریکا میں پاکستان کے سابق سفیر اسد مجید خان نے قومی سلامتی کمیٹی کو مبینہ دھمکی آمیز مراسلے کے حوالے سے بریفنگ دی جبکہ قومی سلامتی کمیٹی کے اعلامیے میں ایک بار پھر اس بات کا اعادہ کیا گیا کہ مراسلے میں کسی قسم کی دھمکی نہیں دی گئی تھی۔

Comments
Loading...