سپریم کورٹ نے طلال چوہدری کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کردیا

سپریم کورٹ آف پاکستان نے وزیر مملکت برائے داخلہ طلال چوہدری کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کردیا۔

سپریم کورٹ کی جانب سے جاری نوٹس میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما طلال چوہدری کو 6 فروری کو سپریم کورٹ میں پیش ہونے کا حکم دیا گیا ہے۔

طلال چوہدری کےخلاف توہین عدالت کیس اوپن کورٹ میں مقرر کیا گیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق طلال چوہدری کو توہین عدالت کا نوٹس ان کی حالیہ تقریر پر دیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ سپریم کورٹ آف پاکستان نے (ن) لیگ کے سینیٹر نہال ہاشمی کو بھی توہین عدالت کا مرتکب قرار دیتے ہوئے ایک ماہ قید اور 50 ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی ہے جس جس کے بعد وہ 5 سال کے لیے نااہل ہوگئے ہیں۔

عدالتی فیصلے کے بعد پولیس سینیٹر نہال ہاشمی کو احاطہ عدالت سے گرفتار کرکے تھانہ سیکریٹریٹ لے گئی، جہاں ضروری کارروائی کے بعد انہیں اڈیالہ جیل منتقل کردیا گیا۔

سینیٹر نہال ہاشمی نے گزشتہ برس کراچی میں عدلیہ مخالف تقریر کی تھی، جس پر سپریم کورٹ نے توہین عدالت کا ازخود نوٹس لیا تھا۔

Comments
Loading...